دودھ اور مچھلی ایک ساتھ استعمال کرنے سے کیا ہوتا ہے؟

ھم یہ بات بچپن سے سنتے آئے ہیں کہ مچھلی کھانے کے بعد دودھ پینے سے جسم پر برص کے نشان پڑتے ھیں، مگر ھر مچھلی میں یہ داغ پیدا کرنے کی صلاحیت نہیں ۔اصل کہانی کچھ یوں ھے کہ، سمندر اور دریا کے پانی کی تہہ میں مختلف قسم کی قدرتی جڑی بوٹیاں بھی پائی جاتی ھیں اور ضرورت کے مطابق کبھی کبھی مچھلیاں وہ جڑی بوٹیاں کھا لیتی ھیں۔(جیسا کہ آپ نے دیکھا ھو گا کہ بلی جب بیمار ھوتی ھے تو وہ گھاس کھاتی ھے )اسی طرح جب مچھلی بھی حسب حاجت یہ بوٹی کھا لیتی ھے تو اس میں یہ تاثیر پیدا ھو جاتی ھے، کہ اسکو کھانے والے کا جسم داغدار ھو جائے ۔سائنس ابھی تک یہ بات دریافت کرنے میں ناکام رھی ھے

کہ وہ کونسی بوٹی ھے کہ جسکے کھانے سے مچھلی میں یہ تاثیر پیدا ھو جاتی ھے ۔اس لئے حفظ ماتقدم کے طور پر یہ حکم لگا دیا گیا ھے کہ مچھلی کھانے کے بعد دودھ پینے سے گریز کیا جائے۔اور اگر کوئی انسان نادانستہ طور پر یہ بھول کر بیٹھے تو اسکا توڑ بھی موجود ھے ۔وہ یہ کہ آپ فوری طور تیز پتی کی چائے (کالی چائے) ایک کپ پی لیں۔بفضلِ تعالیٰ آپ برص سے محفوظ رھیں گے.

کیٹاگری میں : health

اپنا تبصرہ بھیجیں